Monday, Jul 15th

Last update12:39:09 AM GMT

اٹالین ایسوسی ایشن نے پاکستانی پہاڑوں کی حفاظتی ٹیم قائم کردی

روم۔ 14 نومبر 2012 ۔۔۔ اٹلی کی ایسوسی ایشن EvK2Cnrنے پاکستان کی پہاڑوں کی تنظیم l’Alpine Club of Pakistanکی مدد سے پہاڑوں کی حفاظتی ٹیم قائم کردی ہے ۔ ایک کورس اور باہمی ٹریننگ کے زریعے اس منصوبے  کو 18 اکتوبر کو مکمل کرلیا گیا ہے ۔ اس کورس کے بعد پاکستان میں موجود قراقرم کی بلند چوٹیوں پر چڑھنے والے سیاحوں کی مدد کے لیے ایک حفاظتی ٹیم تشکیل دیدی گئی ہے ، جس کا نام Concordia Rescue Teamہے ۔ یہ کورس 8 اکتوبر کو شروع ہوا اور اس میں سکردو، کاندے اور شگار کے پہاڑ منتخب کیے گئے ۔ اس کورس میں مختلف علاقوں سے تعلق رکھنے والے 12 گائیڈوں نے حصہ لیا ۔ گلگت بلتستان کے ڈویلپمنٹ کے وزیر راجہ عاضم  نے کہا کہ ایسے کورسوں سے علاقے میں ترقیکے امکان پیدا ہونگے اور سیاحوں کی سیکورٹی اور ریسکیو کے مسائل بھی حل کیے جا سکیں گے ۔ یہ منصوبہ اٹلی کی ایسوسی ایشن EvK2Cnrاور قراقرم انٹرنیشنل یونیورسٹی کے تعاون سے عمل میں آیا ۔ اس منصوبے کے لیے تمام اخراجات پاکستان کے قرضے سے حاصل کیے گئے جو کہ پاکستان نے اٹلی کو واپس کرنے ہیں ۔ اٹلی کی ایسوسی ایشن پاکستان میں جو بھی منصوبہ عمل میں لاتی ہے ، اس کا خرچہ پاکستان کے قرضوں کے عوض حاصل کیا جاتا ہے ۔ اٹلی کی حکومت نے پاکستان سے جو قرضے وصول کرنے ہیں ، وہ رقم وصول کرتے ہوئے ایسے منصوبوں میں صرف کرتی ہے جو کہ پاکستان کی ترقی کے لیے صرف کیے جاتے ہیں ۔ کورس کے اساتذہ میں 2 اٹالین شامل تھے ، جن کے نام Michele Cucchi e Maurizio Galloہیں ۔ کورس میں شامل ہونے والے حضرات نے تجربات کو عمل میں لاتے ہوئے باہمی معلومات حاصل کیں ، پہاڑوں کے بارے میں علم حاصل کیا گیا اور پہاڑوں پر گائیڈ بننے کی ٹریننگ کی گئی ۔ ٹریننگ کے دوران دنیا کی بلند ترین چوٹیوں پر چڑھنے، اترنے اور آس پاس جانے کے بارے میں معلومات حاصل کی گئیں اور بلند پہاڑوں پر سیکورٹی اور انسانی حفاظت  کے اصولوں کو سمجھنے کے بارے میں بات چیت کی گئی ۔ سیاحوں کو اونچے پہاڑوں پر ادوایات دینے اور ایمرجنسی کی صورت میں علاج و معالجہ کرنے کے طریقہ کار سیکھے گئے ۔ پاکستان کے وزیر راجہ عاضم نے کہا کہ اٹالین ایسوسی ایشن 20 سال سے اس علاقے کی ترقی اور قدرتی زرائع کی حفاظت کے لیے اپنی سرگرمیاں انجام دے رہی ہے ۔ کورس میں شامل ہونے والے پہاڑوں کے گائیڈوں میں روضی علی علی، غلام نبی رستم، محمد حسن علی ، محمد خان احمد، شمبی خان شمشال، شبیر رضا ، ابراہیم خلیل اور قاضم سدپارہ اور دوسرے گائیڈ شامل ہوئے ۔

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com