Thursday, May 23rd

Last update12:39:09 AM GMT

میلانو میں ہنڈی کا گروہ گرفتار

روم۔ 4 جنوری 2013 ۔۔۔۔ اٹلی کے شمالی شہر میلانو میں ایک پاکستانی کو ہنڈی اور منشیات کی اسمگلنگ کے جرم میں گرفتار کر لیا ہے ۔ پولیس نے اس پاکستانی کا نام نہیں لکھا لیکن انکی تفتیش کے مطابق اسکے ساتھ دوسرے پاکستانی اور مراکش کے غیر ملکی شامل ہیں ۔ پاکستانی کو جمعہ کے روز اس وقت گرفتار کیا گیا ہے ، جب وہ پاکستان سے مالپنسا ائرپورٹ کے زریعے اٹلی میں داخل ہو رہا تھا ۔ اٹلی کی ٹیکسوں کی پولیس Guardia di Finanzaنے اس گینگ کے بارے میں تفتیش کی ہے ۔ اس پاکستانی پر الزام ہے کہ اس نے اٹلی کے فنانس کے سسٹم کی خلاف ورزی کی ہے اور رقم کی غیر قانونی منتقلی میں کردار ادا کیا ہے ۔ پبلک پروسیکیوٹر Ennio Ramondiniنے ٹیکسوں کی پولیس کے تعاون سے گینگ کے سرغنہ کو گرفتار کیا ہے ۔ یہ پاکستانی اٹلی سے غیر قانونی طور پر رقم حاصل کرتے ہوئے پاکستان روانہ کرتا تھا اور غیر قانونی کاروبار کرتا تھا ۔ اٹلی میں ہنڈی یا ہوالہ کا کاروبار غیر قانونی ہے ۔ اس کے علاوہ یہ گروہ پاکستان سے ہیروئن اسمگل کرتے ہوئے میلانو کی مارکیٹ میں پاکستانیوں اور مراکش کے شہریوں کے زریعے فروخت کرتا تھا ۔ گروہ کے افراد ہیروئن ہالینڈ کے زریعے اٹلی میں لاتے تھے اور 31 مئی 2010 میں میلانو کے ائر پورٹ مالپنسا پر انکی ہیروئن پکڑی گئی تھی ۔ اس کیس کے سلسلے میں میلانو، مونزا، تورینو اور بیرگامو  کے صوبوں میں پاکستانیوں کے گھروں پر چھاپے مارے جا رہے ہیں ۔ پاکستانی کے گھر سے 26 ہزار یورو کی رقم پکڑ لی گئی ہے اور گروہ کی اڑھائی لاکھ سے زائد کی پراپرٹی زیر تفتیش آگئی ہے ۔

 

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com