Sunday, Jan 20th

Last update12:39:09 AM GMT

کرکٹ کے کھلاڑی مبشرعلی کا تعارف

روم۔ 17 اکتوبر 2012 ۔۔۔ اٹلی کی انڈر 19 ٹیم کے کرکٹ کے کھلاڑی مبشرعلی کا تعلق گوجرانوالہ تحصیل نوشہرہ ورکاں سے ہے ۔ مبشر انتہائی ہونہار اور ابھرتے ہوئے کرکٹ کے کھلاڑی ہیں اور  اٹلی کی قومی انڈر 19 میں اپنے کھیل کے جوہر دکھا چکے ہیں ۔ انکی عمر 18 سال ہے ۔ حال ہی میں آزاد اخبار نے ان کا انٹرویو لیا ہے ۔ مبشر علی نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ وہ بچپن ہی سے کرکٹ سے بہت لگن رکھتے تھے ۔ یہی وجہ تھی کہ انہیں چھوٹی عمر میں ضلح لیول پر ٹورنامنٹ کھیلنے کے لیے منتخب کیا گیا تھا ۔ انہوں نے گورنمنٹ سیکنڈری ہائی سکول ونی کی طرف سے  پہلا کرکٹ کا  ٹورنامنٹ کھیلا اور انتہائی دلچسپ بیٹس مین قرار دیے گئے ۔ انہوں نے کہا کہ مڈل سکول کی تعلیم مکمل کیے بغیر مجھے میرے والدین نے اٹلی بلا لیا اور اب میں 2009 سے میلان کے قصبے Treviglioیعنی تریویلیو میں آباد ہوں ۔ میں یہاں سکول سے مکینیکل کورس کی تعلیم حاصل کر رہا ہوں اور ساتھ ہی ساتھ کرکٹ بھی کھیل رہا ہوں ۔ مجھے میلان کی مشہور کرکٹ کی کلب kingsgrove  کا نائب کیپٹن مقرر کیا گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ میں نے اپنی کلب کی طرف سے انٹرنیشنل ٹورنامنٹ کھیلے ہیں ۔ میری ٹیم نے انڈر 17 اور انڈر 19 اٹلی کے ٹورنامنٹ جیتتے ہوئے اس ملک کی قومی لیول کی کرکٹ میں اپنا مقام بنایا ہے ۔ میری وائس کپتانی میں ہماری کلب 2 دفع اٹلی کی چیمپیئن بن چکی ہے ۔ گزشتہ سال میں نے وینس کی ٹیم کے خلاف ہاف سنچری بنائی تھی اور ناٹ آؤٹ رہا تھا اور مجھے مین آف دی میچ قرار دیا گیا تھا ۔ مبشر علی نے کہا کہ مجھے کرکٹ کے علاوہ کبڈی اور کشتی بھی اچھی لگتی ہے ۔ میں اپنی تعلیم مکمل کرنے کے بعد بزنس مین بننا چاہتا ہوں ۔ میں کرکٹ کے میدان میں بیٹس مین کے طور پر اپنے جوہر دکھاتا ہوں لیکن سپن بالننگ کرتے ہوئے بالر کا ہنر بھی رکھتا ہوں ۔ میری کامیابی میں میرے والدین کی دعا اور دوست و احباب کا بڑا احسان ہے ۔ میری خواہش ہے کہ میں کرکٹ کی دنیا میں نام کماتے ہوئے بین الاقوامی کرکٹ بھی کھیلوں اور اپنے ملک پاکستان اور میرے دوسرے ملک اٹلی کا نام روشن کرسکوں ۔ انہوں نے کمونٹی کے نام اپنا پیغام روانہ کرتے ہوئے کہا کہ ہماری کمونٹی کو چاہئے کہ وہ اسلامی روایات پر عمل کرتے ہوئے اپنے ملک پاکستان کا نام روشن کریں اور ایک دوسرے کی مدد کرتے ہوئے یکجہتی اور سخاوت کی مثال قائم کریں ۔ ہماری کمونٹی کو چاہئے کہ وہ ان جوان کھلاڑیوں کی بھی مدد کرے جو کہ کھیل کے زریعے پاکستان کا نام بلند کر رہے ہیں ۔ مبشر علی نے کہا کہ آزاد اخبار تمام پاکستانیوں کی اخبار ہے اور اس میں کوئی علاقائیت پرستی نہیں ہوتی ۔ اس لیے تمام پاکستانیوں کو چاہئے کہ وہ اس اخبار کی پروموشن کے لیے کاوش جاری رکھیں ۔ اس اخبار کی وجہ سے اٹلی میں اردو کو تقویت مل رہی ہے ورنہ جوان نسل اردو بولتی تو ہے لیکن لکھتی نہیں ۔ مبشر علی نے کہا کہ وہ جوان جو کہ کرکٹ کے کھیل میں آنے کے خواہش مند ہیں اور ہماری کلب میں شرکت کرنا چاہتے ہیں وہ مجھ سے رابطہ کرلیں۔ موبائل 3271695550 ۔ تصویر میں مبشر علی ۔ دوسری تصویر میں اپنے دو کلب کے بنگلہ دیشی اور سری لنکن کھلاڑیوں کے ہمراہ ، تصویر میں چیمپیئن شپ کا کپ بھی عیاں ہے ۔

altalt

 

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com

آخری تازہ کاری بوقت بدھ, 17 اکتوبر 2012 19:09