Saturday, Mar 25th

Last update08:57:59 PM GMT

شہباز حسین کھوکھر کی الوداعی پارٹی

روم۔ 3 جون 2013 ۔۔۔ کل شام روم میں موجود پاکستانی ایمبیسی میں سابق ہیڈ آف چانسری شہباز حسین کھوکھر کی الوداعی پارٹی دی گئی ۔ اس محفل میں روم کے علاوہ پورے اٹلی کی مشہور پاکستانی شخصیات تشریف لائیں اور انہوں نے شہباز کھوکھر کے ان چار سالوں کی بہت تعریف کی ۔ پروگرام کا آغاز تلاوت کلام پاک سے کیا گیا ۔ اسکے بعد دردانہ ارسلان شاہ نے کمنٹری کے فرائض انجام دیتے ہوئے مقررین کو دعوت دی ۔ اٹلی کی مشہورو معروف شخصیت چوہدری بشیر امرہ نے کہا ہے کہ شہباز حسین کھوکھر جیسی شخصیت کبھی کبھی پیدا ہوتی ہے ۔ انہوں نے اپنے دور میں رشوت ستانی اور سفارش جیسی لعنتوں کو ختم کرتے ہوئے کمونٹی کے لیے ایمبیسی کے دروازے کھول دیے۔ انہوں نے کمونٹی کو متحد کیا اور سالانہ میلہ، بسنت اور دوسرے تہواروں میں تمام پاکستانیوں کی شمولیت کے لیے دن رات کاوش کی ۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں افسوس ہے کہ میلان کونصلیٹ میں شہباز حسین کھوکھر جیسا افسر نہیں آیا اور وہاں کمونٹی سے غیر انسانی سلوک کیا جاتا ہے ۔ ہم چاہتے ہیں کہ وہاں بھی روم کی طرح مہمان نوازی اور بھائی چارے جیسا سلوک عمل میں آئے ۔ چوہدری بشیر نے کہا کہ میلان سے پی آئی اے کی تیسری فلائٹ شروع کی جارہی ہے لیکن روم سے ایک فلائٹ بھی نہیں ہے ۔ ان کی تقریر کے بعد کرسچن کمونٹی کے صدر سرور بھٹی نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے شہباز حسین کھوکھر کے ان چار سالوں کی طرف روشنی ڈالی ۔ بعد میں عارف شاہ نے اپنے خیالات کا اظہار کیا اور شعر سناتے ہوئے شہباز حسین کھوکھر کی جدائی کا دکھ بیان کیا ۔ ایمبیسڈر تہمینہ جنجوعہ نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہو‏ئے کہا کہ شہباز حسین کھوکھر کمونٹی کے ہر دلعزیز تھے اور ہم کوشش کریں گے کہ انکے منصوبوں کو جاری رکھا جائے ۔ یاد رہے کہ غالب اقبال کے بعد شہباز حسین کا نام کمونٹی میں مقبول ہوا ہے ۔ اس محفل میں ناپولی کے مشہور بزنس مین چوہدری شبیر بھی موجود تھے۔ آل اٹلی فیڈریشن کے صدر چوہدری ساجد بھی اسپیشل طور پر اریزو سے تشریف لائے تھے ۔ شہباز حسین کھوکھر نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ انہیں کمونٹی سے کوئی شکا‏یت نہیں ۔ یہ پاکستان میں ایک کنبہ چھوڑ کر آئے تھے اور اٹلی میں آکر انہیں بڑا کنبہ مل گیا جسے پاکستانی کمونٹی کہتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ کمونٹی کے ایڈریس مکمل طور پر ہمارے پاس موجود نہیں ہیں ، اس وجہ سے ہمیں کافی مشکلات پیدا ہوتی ہیں ، اگر ہم تمام کمونٹی کے ایڈریس ایک جگہ لکھ لیں تو اس سے کافی مسائل حل ہو سکتے ہیں ۔ آکو‏یلہ اور مودینا میں زلزلہ کے دوران جب مجھے وہاں جانا پڑا تو ایڈریس نہ ہونے کیوجہ سے کافی مسائل پیدا ہوئے ۔ سفاتکارہ تہمینہ جنجوعہ نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ شہباز حسین کھوکھر تین آدمی تھے ، یعنی شہباز، حسین اور کھوکھر۔ یہ تین آدمیوں کا کام کرتے تھے ۔ ہم انکی خدمات کو ہمیشہ یاد رکھیں گے ۔ تقاریر کے بعد علی بابا گروپ کی جانب سے کھانا پیش گیا اور کمونٹی کے خواتین و حضرات اور بچوں نے خوب لطف اٹھایا ۔ شہباز حسین کھوکھر کی جگہ اقوام متحدہ کے دفتر نیویارک سے ایک نئے افسر آرہے ہیں اور شہباز کھوکھر اپنے بیمار والد کے قریب رہنے کے لیے  اسلام آباد فارن آفس میں شفٹ ہو رہے ہیں  تحریر، اعجاز احمد از روم

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com