Sunday, May 26th

Last update12:39:09 AM GMT

شیخ ڈاکٹر حسن محی الدین قادری صدر سپریم کونسل منہاج القرآن انٹر نیشنل کا دورہ اٹلی


اٹلی-شیخ ڈاکٹر حسن محی الدین قادری19جون بروز بدھ کو اٹلی کے شہر بلونیا میں تشریف لائے جہاں منہاج القرآن کے اہم عہدداران نے انھیں خوش آمدید کہا وہاں سے اٹلی کے شہر چینتو میں تشریف لے گے جہاں انکے اعزاز میں انھیں عشائیہ دیا گیا اور اس عشائیے میں چینتو شہر کے مہر نے خصوصی ملاقات کی اور محبت کا پیغام دیا 20جون بروز جمعرات کو اٹلی کے شہر آریزو میں جلسہ عام سے خطاب کیا جس کا موضوع جمہوریت اور آج کا پاکستان تھا 21جون بروز جمعہ کو اٹلی کے شہر  کارپی میں ڈاکٹر حسن محی الدین قادری کےاعزاز میں استقبالیہ دیا گیا جس میں ریجوایمیلیا مودنہ کے عہد داران نے شرکت کی جمعہ کا خطبہ بھی ڈاکٹر حسن محی الدین قادری نے دیا اور باجماعت نماز جمعہ منہاج القرآن مرکز کارپی میں ادا کی 21جون کی رات کارپی میں ایک پرتکلف عشائیہ دیا گیا جس میں  منہاج القرآن کی فیملیز کے علاوہ اٹالین مہمانوں نے بھی شرکت کی 22جون بروز ہفتہ دو بجے دوپہر جمہوریت اور آج کا پاکستان کے عنوان سے کانفرنس اٹلی کے شہر کارپی میں منعقد ہوئی جس میں مردو خواتین کی کثیر تعداد نے شرکت کی مزید اٹالین مہمانوں نے بھی خصوصی شرکت کی کانفرنس کا آغاز تلاوت کلام پاک کے ساتھ حافظ محفوظ نے کیا جن کے بعد بارگاہ رسالت مآب میں ہدیہ نعت عمر بلال اور کئی نعت خوانوں نے حاصل کیا نقابت کے فرائض علام سید غلام مصطفی مشہدی نے سر انجام دئیے خصوصی خطاب شیخ حسن محی الدین قادری نے کیا انھوں نے اپنے خطاب میں پاکستان کی جمہوریت کا نقشہ کھینچتے ہوئے کہا کہ پاکستان کی ہر چیز پر اشرافیاء کا حق ہے جو سب سے بڑا ڈاکو ہے وہ سب سے بڑا وزیر صدر اور اس طرح کے اہم عہدوں پر فائز ہو جاتا ہے اور جو سب سے بڑا قاتل ہو اس کو اتنا ہی بڑا عہدہ دے دیا جاتا ہے اس طرح پاکستان کے ہر شعبے پر ایک ظالم ایک ڈاکو اور ایک قاتل بٹھادیاگیا ہے جو غریبوں کی عزتیں جانیں اور مال کھا رہے ہیں انھوں نے مزید کہا کہ جو اسلام کے نام پر لوگوں کو دھوکہ دے رہے ہیں اور اسلام کا ایسا نقشہ کھیچ دیتے ہیں جس کا اسلام کے ساتھ دور کا بھی تعلق نہیں ڈاکٹر حسن محی الدین قادری نے میثاق مدینہ کے آرٹیکل لوگوں کو سمجھائے جس میں انھوں نے بتایا کہ سرکار دوعالم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے تمام مذاہب جو مدینہ کے گردونواح میں آباد تھے انکے ساتھ امن معاہدے کیے یہاں تک کہ مدینہ کے یہودیوں کو بھی وہی حقوق حاصل تھے جو ایک مسلمان کو حاصل تھے انھوں نے کہا کہ ایک دفعہ یہودیوں کا ایک قافلہ مدینہ میں آیا تو انکی عبادت کا وقت ہو گیا تو انکو مسجد نبوی میں عبادت کی اجازت دی گئی مزید انھوں نے کہا اگر انسانی حقوق کی بات کی جائے تو سیدنا عمر رضی اللہ عنہ کے دور میں ایک نابینا یہودی بھیک مانگ رہا تھا آپ نے اس سے بھیک مانگنے کی وجہ پوچھی تو اس نے کہا کہ میرے پاس جزیہ دینے کے لیے کچھ نہیں اس لیے بھیک مانگ کر ادا کرتا ہوں آپ رضی اللہ عنہ نے اسی وقت حکم جاری کیا کہ کسی نابینا اور بزرگ سے کوئی جزیہ نہیں لیا جائے گا بلکہ بوڑھوں اور اپاہج افراد کی کفالت اسلامی حکومت کرے گی اس طرح کے کئی واقعات انھوں نے تفصیل سے بیان کئیے جس سن کر اٹالین مہمانوں سمیت حاضرین خوشی سے حیران ہوگے کہ اسلام میں اتنی وسعت ہے اور اسلام انسانوں کے علاوہ جانوروں اور درختوں کے حقوق کی بھی حفاظت کرتا ہے انھوں نے کہا کہ منہاج القرآن بیدارئے شعور کے ذریعے انسانیت میں علم بانٹ رہا ہے کانفرنس کے اختتام پر شیخ حسن محی الدین قادری نے عالم انسانیت کے لیے اللہ کے حضور خصوصی دعا کی ۔
تحریر ، وقاص بٹ

 

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com