Saturday, Nov 18th

Last update08:57:59 PM GMT

پیرس حملے کی سختی سے مذمت کرتے ہیں ۔ اعجاز احمد

روم۔ 8 جنوری 15، تمام اہل وطن سے اپیل کی جاتی ہے کہ وہ پیرس میں ہونے والے دہشت گردی کے حملے کی سختی سے مذمت کریں۔ 7 جنوری بروز بدہ تین دہشت گرد ایک اخبار کے دفتر میں داخل ہوئے اور انہوں نے صحافیوں سمیت 12 افراد کو قتل کردیا۔ حملہ آور اللہ اکبر کے نعرے بلند کرتے رہے اور کلاشنکوفوں سے خون بہاتے رہے ۔ ہمارا حق بنتا ہے کہ ہم یہ ظاہر کریں کہ ہم دہشت گردی کے خلاف ہیں اور یورپ کی صحافی آزادی کی پاسداری کرتے ہیں ۔ اگر کوئی ہمارے مذہب کے خلاف لکھتا ہے تو ہم اسکے اخبار کا بائیکاٹ کرسکتے ہیں لیکن کسی بھی صحافی کو دہمکی یا قتل کرنے کے خلاف ہیں ۔ ہم یورپین قوانین کا احترام کرتے ہیں اور یورپ کی اقدار اور رسومات کے متضاد نہیں ہیں کیونکہ ہم نے یہاں آباد ہونے کا فیصلہ کر رکھا ہے ۔ ہمارے مذہب کا مطلب امن اور سلامتی ہے ۔ تمام مسلمانوں سے اپیل ہے کہ وہ جلسے اور جلوس نکال کر یہ ظاہر کریں کہ وہ دہشت گردی، انتہا پسندی اور عسکریت پسندی کی مذمت کرتے ہیں اور یورپین شہری ہونے کے ناطے ہر قسم کی تنگ نظری کے خلاف ہیں ۔ اعجاز احمد نے کہا کہ انہوں نے کل فرانس ایمبیسی کے سامنے جا کرانکے احتجاج میں حصہ لیا اور حملے کی مذمت کی ۔ تحریر، شیر علی

                                                                   

                                                                                                                 

۔

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com