Saturday, Sep 22nd

Last update12:39:09 AM GMT

بریشیا کی صنا چیمہ کو اسکے والد اور بھائی نے قتل کر دیا

 

21 اپریل 18 ۔۔۔۔ آج اٹلی کے شمالی شہر کے اٹالین اخبار بریشیا اوجی نے خبر دی ہے کہ صنا چیمہ کو اسکے والد اور بھائی نے قتل کر دیا ہے ۔ پورے اٹلی کے اخبارات اور ٹیوی اور ریڈیوز نے اس ہولناک خبر کو شائع کرتے ہوئے تشویش کا اظہار کیا ہے اور ایک بار پھر پاکستانی کمونٹی کے بارے میں منفی بیانات سامنے آرہے ہیں ۔

صنا چمیہ کی عمر 25 سال تھی اور کافی سالوں سے اٹلی کے شمالی شہر بریشیا میں اپنے والدین کے ساتھ آباد تھی ۔ اس نے یہیں سے تعلیم حاصل کی تھی اور اب ایک لائسنس بنانے والی ایجنسی میں کام کر رہی تھی ۔ اسکے والدین نے اٹالین پاسپورٹ حاصل کرنے کے بعد جرمنی جانے کا فیصلہ کیا تھا اور اب وہیں آباد تھے۔ کہا جاتا ہے کہ سنا ایک اٹالین سے شادی کرنا چاہتی تھی اور اسکے گھر والے اس کے فیصلے کے خلاف تھے ۔ صنا کے اٹالین دوستوں اور ایجنسسی والوں نے بتایا کہ وہ ہنس مکھ اور ہمدرد لڑکی تھی اور سب سے اخلاق سے پیش آتی تھی ۔ اس کیس کی تفتیش میں اٹالین ایمبیسی اسلام آباد بھی اپنا کردار ادا کرے گی ۔ 

alt

صنا چیمہ گزشتہ 2 ماہ سے پاکستان کے شہر گجرات گئی ہوئی تھی ، جیسا کہ وہ اکثر جایا کرتی تھی لیکن اس بار اسکا آخری سفر تھا ۔ اسی عرصے میں اسکا والد اور بھائی بھی جو کہ جرمنی میں آباد تھے، گجرات آئے ہوئے تھے ۔ انہوں نے موقع کا فائدہ اٹھا کر اپنی عزت کے نام پر سنا کو قتل کر دیا ۔ گجرات پولیس نے ان دونوں کو گرفتار کر لیا ہے ۔ یاد رہے کہ صنا کے پاس اٹالین پاسپورٹ تھا اور جرمنی جانے کے لیے تیار نہیں تھی۔ 

alt

یاد رہے کہ 2006 میں اسی شہر کی ایک پاکستانی لڑکی حنا سلیم کو اسکے والد اور بہنوئی نے قتل کردیا تھا ۔ اسی طرح بلونیا کے قریبی گاؤں میں چند سال قبل شہناز بیگم کو اسکے خاوند اور بھائی نے قتل کر دیا تھا اور اسی کیس میں نوشین بٹ یعنی شہناز بیگم کی بیٹی بھی بری طرح زخمی ہوگئی تھی اور کئی دن بیہوش رہنے کے بعد حوش میں آئی تھی ۔ اب اسی سال مچیراتا شہر کے ایک گاؤں میں ایک پاکستانی نے اپنی 19 سالہ بیٹی کو ازکا ریاض کو قتل کر دیا ہے ، جسکی تفتیش ابھی ہو رہی ہے کیونکہ ازکا کے والد نے کہا ہے کہ یہ کار ایکسیڈنٹ میں مری تھی ۔

تصویر میں صنا اور اسکا والد 

 

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com

آخری تازہ کاری بوقت ہفتہ, 21 اپریل 2018 17:22