Friday, Aug 14th

Last update06:26:21 PM GMT

اٹلی میں امیگریشن کھلنے کے امکانات

 

روم، 2 فروری 2020۔۔۔۔۔ اٹلی کی وزیر داخلہ لوچیانا لامورجیزے نے قومی اسمبلی میں خطاب کرتے ہوئے اس بات پر زور دیا ہے کہ اٹلی میں اس وقت 7 لاکھ سے زائد غیر قانونی تارکین وطن موجود ہیں اور وہ چھپ کر کام کرتے ہیں اور ٹیکس جمع نہیں کرواتے ۔ اگر ان میں سے کم از کم 4 لاکھ غیر ملکیوں کو امیگریشن کے حقوق دیے جائیں تو یہ لوگ ایک ارب یورو کے ٹیکس جمع کروائیں گے اور پراویڈنٹ فنڈ کا محکمہ ان سے 3 ارب حاصل کرے گا ۔ انکے ٹیکسوں سے ہم اٹلی کے پنشن شدہ اٹالین کی مدد کرسکتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ امیگریشن حاصل کرنے کے لیے لازمی ہے کہ غیر ملکی اٹلی میں کچھ عرصہ سے آباد ہو، اس سے کوئی کام کا کنٹریکٹ کرسکے ۔ یعنی کھلی امیگریشن نہ کھولی جائے بلکہ ہر کیس کی پڑتال کرنے کے بعد اسے امیگریشن دی جائے ۔ امیگریشن میں کامیابی کے بعد غیر ملکی کو پرمیسو دی سوجورنو یا ورک پرمٹ جاری کیا جائے ۔ وزیر داخلہ کے اس بیان کے بعد دائیں بازو کی سیاسی پارٹیوں نے سخت تنقید کی ہے اور کہا ہے کہ امیگریشن کا اعلان ہوگز نہ کیا جائے ۔ حکومت میں موجود سیاسی پارٹیاں وزیر داخلہ کے اس اقدام پر سوچ بچار کررہی ہیں ۔

Risultato immagini per lamorgese sanatoria

تصویر میں وزیر داخلہ لا مورجیزے اسمبلی میں امیگریشن کی تجویز پیش کرتے ہوئے 

 

 

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com

آخری تازہ کاری بوقت اتوار, 02 فروری 2020 11:30