Saturday, Mar 25th

Last update08:57:59 PM GMT

RSS

خبریں

آزاد کیوں بند ہے

  

 خواتین و حضرات اٹلی میں معاشی بحران کیوجہ سے ہم نے آزاد کو بند کررکھا ہے لیکن جونہی ہمارے مسائل حل ہونگے ، ہم آپکی خدمت میں حاضر ہو جائیں گے۔

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com

آخری تازہ کاری بوقت بدھ, 02 ستمبر 2015 19:18

پاکستان میں پورتو کو ہلاک کرد یا گیا

روم،24 اپریل 2015- پاکستان میں  تین سال قبل 21 جنوری کے روز ملتان سے ایک اٹالین جوانی لو پورتو کو اغوا کر لیا گیا تھا ، ابھی تک اسکے اغوا کی کوئی خبر نہیں آرہی تھی ۔ اسکے لواحقین اور اٹالین حکومت جوانی کے اغوا کے سلسلے میں سخت پریشان تھے ۔ اسکے خاندان نے اپیل کی تھی کہ اسے فوری طور پر رہا کر دیا جائے ۔ جوانی پاکستانی عوام سے محبت کرتا تھا اور یہ اسی سلسلے میں پاکستان میں سیلاب زدگان کی مدد کے لیے کام کر رہا تھا ۔ جوانی کا تعلق اٹلی کے جزیرے altسسلی کے شہر پلیرمو سے ہے ۔ جوانی اکتوبر کے مہینے میں پاکستان میں آیا تھا اور سیلاب زدگان کے لیے گھر تعمیر کر رہا تھا ۔ یاد رہے کہ گزشتہ سیلاب میں پاکستان میں 4 ہزار سے زائد افراد ہلاک ہوئے تھے اور لاکھوں پاکستانی اپنا گھر کھو بیٹھے تھے ۔ جوانی ایک جرمن این جی او کے لیے کام کر رہا تھا ، جس کا نام welthungerhilfeہے ۔ یہ اس این جی او میں پراجیکٹ مینجر ہے اور اسکے ساتھ اسکے ایک ہالینڈ کے ساتھی کو بھی اغوا کر لیا گیا تھا ۔ جوانی نے انگلینڈ کے بہترین یونیورسٹیوں سے دو ڈگریاں حاصل کی تھیں اور وہ اس سے قبل کئی مشہور این جی او میں کام کر چکا تھا ، جس میں اٹالین ایمرجنسی بھی شامل ہے ۔ جوانی اور اسکے ساتھی کو چار ڈاکوؤں نے اغوا کیا تھا ، ان کے پاس اسلحہ تھا ۔ جوانی کے ساتھی کا تعلق ہالینڈ سے ہے اور اسکی عمر 45 سال تھی ۔ اٹالین اخبار کے مطابق انکے اغوا کا پتا چلانا بہت مشکل تھا ۔ پاکستان میں  کرپٹ سیاست، مذہبی جنونیت اور آسان دولت جیسے اجزا کی موجودگی میں کوئی بھی آئیڈیا لگایا جا سکتاتھا ۔

اوپر والی خبر آزاد نے تین سال پہلے لگائی تھی اور اب نئی خبر کے مطابق لو پورتو کو جنوری 2015 میں ایک امریکی اغوا کے ہمراہ امریکہ ہی کے ایک ڈرون حملے نے پاکستان میں ہلاک کر دیا ہے ۔ تین دن قبل صدر اوباما نے اٹالین وزیر اعظم رینسی کو فون کرتے ہوئے پورتو کی موت کی اطلاع فراہم کردی ہے اور معافی بھی مانگی ہے ۔ انہوں نے کہا ہے کہ امریکی سی آئی اے نے ایک حملے میں دہشت گردوں کو ہلاک کرنے کے لیے ڈرون حملہ کیا اور انہیں بعد میں پتا چلا کہ اسی کمپاؤنڈ میں ایک امریکی ہینسٹائن اور اٹالین اغواشدہ بھی شامل تھے ۔ پورے اٹلی میں لو پورتو کی موت پر بحث ہو رہی ہے اور اٹالین خفیہ تنظیم اور حکومت کے خلاف تنقیدی بحث ہو رہی ہے ۔ اٹالین حکومت نے بتایا کہ ہمیں معلوم تھا کہ لوپورتو زندہ ہے اور ہم اسکی بازیابی کے لیے کام کر رہے تھے ۔ یاد رہے کہ ہالینڈ کے شہری کو ازاد کروالیاگیا تھا لیکن لوپورتو کی تلاش جاری تھی ۔ اٹالین وزیر اعظم نے پورتو کے خاندان کو اسکی موت کی خبر سنا دی ہے اور انتہائی افسوس کا اظہار کیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم پورتو کی میت ضرور حاصل کریں گے اور اسے اٹلی لائیں گے ۔

 

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com

آخری تازہ کاری بوقت جمعہ, 24 اپریل 2015 20:34

اٹلی کی سستی ترین ائر ٹکٹ کا مرکز

اٹلی کی مشہور و معروف شخصیت نیاز میر کہتے ہیں کہ ہم پندرہ سالوں سے ائر ٹکٹوں کی ایجنسی کا کام کر رہے ہیں اور مارکیٹ میں موجود ہیں ۔ ہم ٹکٹ کی گارنٹی اور اسکی سستی ترین قیمت پر یقین رکھتے ہیں اور اپنے گاہک کی مدد کے لیے ہمیشہ حاضر رہتے ہیں ۔ آپ ہم سے رابطہ کرتے ہوئے خدمت کا موقع فراہم کریں ۔

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com

بشارت اور اسکی اٹالین بیوی کی تلاش جاری ہے

19 جنوری 2015 ۔۔۔۔ پاکستانی محمد بشارت اور اسکی اٹالین بیوی دوریتا کی تلاش جاری ہے ۔ دوریتا کا تعلق ناپولی شہر سے ہے اور 6 سال قبل اسکی ملاقات محمد بشارت سے ہوئی تھی ۔ دونوں ایک دوسرے سے محبت کرنے لگے اور ایک دن انہوں نے کمونے یا میونسپل کمیٹی میں جا کر شادی کر لی ۔ دوریتا کے والدین اس شادی پر راضی نہیں تھے ۔ محمد بشارت ناپولی میں سڑک پر ایک غیر قانونی اسٹال لگاتے ہوئے گزارا کرتا تھا ۔ اٹالین اخبارات کے مطابق محمد بشارت مذہبی انسان تھا لیکن عسکریت پسند نہیں تھا۔ دوریتا اسکے ساتھ چند سال پہلے پاکستان گئی تھی اور وہاں 2 ماہ رہی تھی ۔ اب یہ دونوں گزشتہ  سال پاکستان کے شہر لاہور گئے تھے جو کہ بشارت کا شہر بھی ہے ۔ انکے ایک چھوٹا سا بیٹا بھی تھا جو انکے ساتھ پاکستان گیا تھا ۔ جون 2013 میں دوریتا پاکستان گئی تھی اور اسکے بعد وہاں کافی عرصہ کے بعد اس نے اپنے والدین کو فون کیا تھا کہ اسکی جان خطرے میں ہے اور روتے روتے اس نے واپس آنے کی خواہش ظاہر کی تھی ۔ والدین نے پریشانی کی حالت میں 15 سو یورو خرچ کرتے ہوئے تین ٹکٹیں خرید کر روانہ کر دی تھیں ۔ انہوں نے کویت ائر کے زریعے وایا کویت روم کے فیومی چینو ائر پورٹ پر آنا تھا ۔ جب یہ فلائٹ روم پہنچی تو پتا چلا کہ دوریتا اور محمد بشارت نے اس فلائٹ پر سفر کیا ہے اور بچہ انکے ساتھ نہیں تھا ۔ اس کے علاوہ یہ لوگ کویت سٹی میں پہنچنے کے بعد دوبارہ اٹلی کے لیے روانہ نہیں ہوئے ۔ ان تمام شک و شبہات کے بعد دوریتا کے اٹالین والدین جو کہ ناپولی میں قدیمی سامان بیچنے کی دکان کے مالک ہیں ، انہوں نے پولیس کو پرچہ کروا دیاہے اور اسکے علاوہ انہوں اٹلی کی وزارت خارجہ کے دفتر میں بھی اپنی بیٹی اور اسکے بچے اور داماد محمد بشارت کی تلاش کے لیے بھی درخواست دیدی ہے ۔ کہا جاتا ہے کہ انکے کاغذات پر کسی دوسرے خاندان نے سفر کیا ہے جو کہ غیر قانونی طور پر کسی منزل کی تلاش میں ہے یا پھر انہیں اغوا کر لیا گیا ہے ۔ اگر آپ اس خاندان کے بارے میں کچھ جانتے ہیں تو ہم سے رابطہ کریں ۔ تحریر اعجاز احعد

موبائل ۔ 00393476937016

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com

روم ایمبیسی کی ٹیم 3 اور 4 جنوری کو پراتو کا دورہ کرے گی

روم۔ 31 دسمبر 2014 ۔۔۔۔ رپورٹ ، اعجاز احمد ۔۔۔۔ خواتین و حضرات روم ایمبیسی کی ٹیم 3 اور 4 جنوری2015 کو پراتو کا دورہ کرے گی ۔ 3 اور 4 جنوری  یعنی بروز ہفتہ اور اتوار وزٹ کے لیے ایمبیسی کی قونصلر سیکشن کی ٹیم Hotel President, Via Arrigo Simintendi 20 Prato  میں تمام دستاویزات کی وصولی اور ادائیگی کرے گی ۔ ہفتہ کے روز صبح 8 بجے سے لیکر شام 5 بجے تک کام کیا جائے گا ، اس دوران دوپہر 1 بجے سے لیکر 2 بجے تک وقفہ کیا جائے گا ۔ اتوار کے روز صبح 8 بجے سے لیکر دوپہر 12 بجے تک کام کیا جائے گا ۔ وزٹ کے دوران کمپیوٹرائزڈ پاسپورٹ کی درخواست دہندگان کو حوالگی، نوزائیدہ بچوں کے ہاتھ سے لکھے گئے پاسپورٹ، نادرا سے موصول شناختی کارڈز کی درخواست دہندگان کو حوالگی، نادرا کارڈز کے لیے درخواستیں اور اسکے علاوہ تمام اعتراضات اور غلطیوں کے لیے بھی خدمات انجام دی جائيں گی ۔ تمام اہل وطن سے اپیل کی جاتی ہے کہ وہ اپنے مطلوبہ کاغذات اپنے ساتھ لیکر آئيں۔

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com