Thursday, Apr 25th

Last update12:39:09 AM GMT

RSS

لیگل گائیڈ

قسطوں پر خریداری کی گائیڈ

 

عام طور پر دکان دار اپنے گاہکوں کو سامان فروخت کرنے کے لیے قسطوں پر خریداری کرنے پر رضامند کرتے ہیں ۔ مثال کے طور پر اگر آپ نے ایک اچھا ٹیوی خریدنا ہے، فریج، بیڈ کا گدا تو آپ پوری رقم دینے کی بجائے قسطیں کر سکتے ہیں ۔ اس قسم کے قسطوں کے سسٹم کو credito al consumoیا استعمال ہونے والی چیزوں کا سسٹم قرار دیا جاتا ہے ۔ اس سسٹم سے استعمال ہونے والی مہنگی چیزیں بھی خریدی جا سکتی ہیں ۔ قسطوں پر خریداری کی رقم تقسیم کرتے ہوئے ادا کی جاتی ہے ۔ عام طور پر ماہانہ قسط کی جاتی ہے اور یہ قسط کی رقم ختم ہونے تک جاری رہتی ہے ۔ قسطوں پر خریداری عام طور پر  بنکوں یا فنانس کے اداروں کی طرف سے کی جاتی ہے یا پھر زاتی قرضہ داری سے کی جاتی ہے ۔ استعمال ہونے والی چیزوں کے قرضوں کے سسٹم میں وہ اشیا آتی ہیں جن کی کم سے کم قیمت 200 یورو ہواور زیادہ سے زیادہ انکی قیمت 75ہزار یورو تک ہو ۔  اشیا کی خریداری کے بعد انکی قیمت ادا کرنے کے لیے قسطیں کی جاتی ہیں جو کہ ایک تہہ شدہ رقم پر مبنی ہوتی ہیں ۔ اس رقم کی ادائیگی آپ اپنے بنک کے کرنٹ اکاؤنٹ یا کریڈٹ کارڈ کے زریعے ادا کر سکتے ہیں ۔ آپ خود براہ راست ادا کر سکتے ہیں یا پھر آپ اپنے بوستا پاگا سے پانچواں حصہ قسط کی ادائیگی کے لیے صرف کر سکتے ہیں ۔ یہ رقم ہر ماہ براہ راست آپ کی پے سلپ یا بوستا پاگا سے کاٹ لی جاتی ہے ۔

استعمال ہونے والی چیزوں کی قسطوں کے لیے ایک باقاعدہ معاہدہ کیا جاتا ہے ۔ ،عام طور پر اس صورت میں فنانس کا ادارہ دکان دار کے زریعے گاہک سے ایک معاہدہ کرتا ہے ، جس کے مطابق گاہک پر لازمی ہوتا ہے کہ وہ سامان کی مکمل رقم قسطوں کے زریعے ادا کرے ۔ اس طریقہ کار کے لیے ایک باقاعدہ لکھا ہوا معاہدہ کیا جاتا ہے ، جس کی ایک کاپی گاہک کو دی جاتی ہے ۔ فنانس کا ادارہ استعمال ہونے والی چیزوں کا قرضہ جاری کرنے سے قبل گاہک کی معاشی صورت حال سے واقفیت حاصل کرتا ہے ۔ یہ دیکھا جاتا ہے کہ اگر گاہک نے کوئی دوسرا قرضہ لے رکھا ہے یا پھر اس کی بچت خوشحال ہے یا نہیں ۔ گاہک سے ہونے والے معاہدہ یا کنٹریکٹ میں کافی معلومات موجود ہوتی ہیں۔ اس میں لکھا ہوتا ہے کہ گاہک کا نام وغیرہ کیا ہے اور فنانس کے ادارے کا نام وغیرہ کیا ہے ۔ اس کے بعد اس سامان یا چیز کا نام لکھا ہوتا ہے جو کہ خریدی گئی ہے ۔ اس میں چیز کی قیمت درج ہوتی ہے اور قسطوں کی تہہ کردہ رقم بھی موجود ہوتی ہے ۔ اس کے بعد قسطوں کی اختتام کی تاریخ درج ہوتی ہے ۔  اگر آپ قسط دیر سے جمع کروائیں تو اس صورت میں اضافی رقم کے بارے میں درج ہوتا ہے ۔ اگر آپ وقت سے قبل تمام قسطوں کی رقم جمع کروانے کے خواہشمند ہیں تو اس صورت میں آپ کو مختلف اخراجات اور سرکاری اخراجات کی رقم بھی ادا کرنی ہوتی ہے جو کہ آپ کے معاہدہ کے لیے منعقد کی گئی تھی ۔ معاہدہ میں لکھا ہوتا ہے کہ آپ کو قرضے میں کتنی رقم ادا کی گئی ہے اور اس کے بعد آپ نے قسطوں کے زریعے کتنی رقم ادا کرنی ہے ۔ معاہدہ میں لکھا ہوتا ہے کہ آپ نے کتنا سود ادا کرنا ہے یا پھر TAEGکی رقم کتنی ہوگی ۔ معاہدہ میں لکھا ہوتا ہے کہ قرضے کی رقم وقت اور حالات کے بعد کیسے تبدیل ہو گی ۔ یاد رہے کہ فنانس کے ادارے والے گاہک سے وہ اضافی رقم حاصل نہیں کر سکیں گے ، جس کا زکر کنٹریکٹ میں نہیں کیا گیا ۔ TAEGکیا ہے ۔ یہ الفاظ کا مخفف ہے جسے tasso annuo effettivo globaleیا اصل سالانہ گلوبل ٹیکس کہتے ہیں ۔ ہوتا یوں ہے کہ آپ گاہک کی صورت میں ہزاروں یورو کی ایک کار خریدتے ہیں اور پوری رقم نہ ہونے کیوجہ سے کسی فنانس کی ایجنسی سے قرضہ حاصل کرتے ہوئے قسطیں کرتے ہیں جو کہ ایک تہہ شدہ عرصے میں ادا کیا جاتا ہے ۔ اس عرصے میں فنانس والے آپ کو مکمل رقم ادا کر دیتے ہیں ۔ اس رقم کی ملکیت پر فنانس والے ٹائیگ ٹیکس ادا کرتے ہیں اور فنانس والے یہ رقم گاہک سے حاصل کرتے ہیں ۔ ٹائیگ کی رقم گاہک کو قسطوں اور سود کے علاوہ ادا کرنی ہوتی ہے ۔ ٹائیگ کی رقم کنٹریکٹ میں موجود ہوتی ہے ۔ گاہک یہ رقم قسطوں کے زریعے ادا کرتا ہے ۔

خبردار۔ عام طور پر فنانس کمپنیوں والے گاہک کو اس وقت قرضہ ادا کرتے ہیں ، جب وہ ڈاک کی رسیدوں کے زریعے قسط ادا نہ کرے بلکہ کسی بنک اکاؤنٹ یا کریڈٹ کارڈ سے قسطیں ادا کرے ، اسی لیے فنانس کمپنی والے گاہک کے کرنٹ اکاؤنٹ کا پوچھتے ہیں ۔ اگر آپ بنک کے زریعے RIDکے طریقے سے قسط ادا کریں اور کسی وجہ سے قسط بند کروانے کے خواہشمند ہوں تو آپ کو بنک میں یا تو ایک خط واپسی کے جواب والی رجسٹری سے روانہ کرنا ہوگا یا پھر خود بنک میں جا کر قسط کو رکوانا ہوگا۔ اگر آپ اپنے کریڈٹ کارڈ کے زریعے قسط ادا کر رہے ہیں تو اس صورت میں آپ کو فنانس کمپنی کو ایک خط واپسی کے جواب والی رجسٹری کے ساتھ روانہ کرنا ہوگا ۔ یعنی اگر آپ نے کوئی قسط ادا نہیں کی یا پھر کسی قسط کا رزلٹ موجود نہیں تو اس صورت میں فنانس کمپنی کو خبرداد کیا جاتا ہے ۔   ایک نئے قانون کے مطابق اگر گاہک چاہے تو وہ قرضے کے معاہدے کو ختم کر سکتا ہے ۔ نئے قانون کے مطابق گاہک قرضے کے معاہدے کو اس کے شروع ہونے کے بعد 14 دنوں کے اندر رکوا سکتا ہے ۔ اگر گاہک نے قرضے کی رقم حاصل کر لی ہے تو اس صورت میں اسے تمام رقم کیس گئے اخراجات کے ساتھ واپس کرنا ہوگی ۔ اگر فنانس کمپنی نے قرضے کی رقم ادا نہیں کی تو اس صورت میں گاہک خریدی ہوئی چیز کی تمام تر رقم دکاندار کو ادا کرے گا ، جہاں سے اس نے یہ چیز خریدی ہے ۔ یاد رہے کہ اگر آپ کوئی قسط ادا نہیں کریں گے تو اس سے آپ کو مسائل کا سامنا کرنا ہوگا ۔ سب سے پہلے فناس کمپنی آپ کو ایک پیغام کے زریعے قسط ادا کرنے کے لیے کہے گی ۔ اگر آپ اس پیغام پر بھی قسط کی رقم ادا نہیں کریں گے تو آپ کو ایک نوٹس کے زریعے باخبر کیا جائے گا اور آپ کا معاہدہ ختم کر دیا جائے گا ۔ قسطیں ادا نہ کرنے پر آپ کا نام CRIFیعنی ان افراد میں ڈال دیا جائے گا جو کہ بنک کرپٹ یا دیوالیہ میں شامل ہوتے ہیں ۔ اس کے علاوہ فنانس کمپنی آپ سے رقم حاصل کرنے کے لیے چارہ گوئی کرے گی ۔

 

 

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com

غیر ملکی ملازموں کی پہلی بھرتی اور نوکری تبدیل کرنے کا حق

اگر آپ ایک غیر ملکی ملازم کو کام پر رکھنا چاہتے ہیں اور اس کا تعلق ایک غیر یورپین ملک سے ہے تو آپ کو اپنے متعلقہ صوبے کے دفتر sportello unicoیا اجتماعی دفتر سے di nulla ostaیا اجازت نامہ حاصل کرنا ہو گا ۔ اگر آپ چاہتے ہیں کہ غیر ملکی کو کام والی جگہ کے ایڈریس پر رکھا جا ئے تو اس صورت میں اس صوبے یا علاقے کا ایڈریس استعمال کیا جائے گا ۔ اس بھرتی کے لیے آپ کو سالانہ کوٹے یا decreto flussiکا انتظار کرنا ہو گا ۔ یہ کوٹے غیر یورپین امیگرنٹس کے لیے تیار کیے جاتے ہیں ۔

اگر آپ غیر ملکی ملازم کو پہلے سے جانتے ہیں تو آپ کو مندرجہ زیل کوائف پورے کرنا ہونگے۔ نلا اوستا یا اجازت نامہ حاصل کرنے کی درخواست۔۔ تمام وہ کاغذات جن سے یہ ثابت ہو کہ غیر ملکی ملازم کی رہائش قانون کے مطابق ہے ۔یہ قانون ہر صوبے میں مختلف ہوتا ہے ۔ ۔ کام کے کنٹریکٹ کی پیشکش، کنٹریکٹ کے کوائف کی قبولیت اور غیر ملکی ملازم کے ملک کے جہاز کی واپسی کی ٹکٹ۔ ۔ آپ کا حق ہے کہ آپ اجتماعی دفتر میں ایک ڈیکلریشن کے زریعے یہ ثابت کریں کہ آپ کنٹریکٹ کے متعلق تمام تبدیلیوں سے دفتر کو باخبر کریں گے ۔  ان تبدیلیوں میں کنٹریکٹ ختم کرنا یا ایڈریس کی تبدیلی وغیرہ شامل ہیں ۔اگر آپ غیر ملکی ملازم کو نہیں جانتے تو اس صورت میں مندرجہ بالا کاغذات کے ساتھ اجازت نامہ حاصل کرنے کے لیے آپ کو ان لسٹوں میں درخواست جمع کروانی ہوگی جو کہ اٹالین کونصلیٹوں یا ایمبیسیوں میں موجود ہوتی ہیں ۔ یہ لسٹیں صرف ان ممالک میں پائی جاتی ہیں ،جن ممالک کے ساتھ اٹلی نے امیگریشن کے موضوع پر باہمی معاہدات کر رکھے ہیں ۔ یہ لسٹیں ہر ملک میں مختلف ہوتی ہیں ۔ ان میں غیر ملکی ملازم کے تمام کوائف نام اور تاریخ پیدائش وغیرہ، اس کا پروفیشن یا کام کی مہارت، اٹالین زبان کے لکھنے اور بولنے کا صلاحیت، کام کی قسم اور ترجیح( موسمی ملازم، مدت کا کنٹریکٹ یا غیر معینہ مدت کا کنٹریکٹ) ۔ اس کے علاوہ یہ بھی لکھا ہوتا ہے کہ ملازم نے کونسا فارمیشن کا کورس کیا ہے اور یہ کس سیکٹر میں کام کرنے کی اہلیت رکھتا ہے ۔

Sportello unicoیا اجتماعی دفتر ان درخواستوں کو روزگار کے دفتر یا centro per l’impiegoیا سی پی آئی میں روانہ کر دیتا ہے ۔ سی پی آئی والے یہ دیکھتے ہیں کہ آیا کہ ان نوکریوں کے لیے اگر اس دفتر کی لسٹوں میں جگہ ہے یا نہیں ہے ۔ اگر ملک کے کسی صوبے میں ان نوکریوں کے لیے لوکل بے روزگار ملازمین نے درخواست دے رکھی ہے ۔ اجتماعی دفتر والے ان لسٹوں کی پبلسٹی کے لیے انہیں انٹر نیٹ میں بھی شائع کر دیتے ہیں ۔ ان لسٹوں کو سی پی آئی دفتروں میں ٹیلی میٹک طریقے سے روانہ کیا جاتا ہے ۔ اجتماعی دفتر ان لسٹوں کی اشاعت کے لیے تمام ہتھکنڈے استعمال کرتا ہے ۔ اجتماعی دفتر درخواست جمع کرنے کے بعد 40 دنوں میں اس پر یوں کام کرتا ہے  ۔ دفتر والے تھانے کے ڈائریکٹر کا جواب طلب کرتے ہیں ۔ ڈائریکٹر غیر ملکی ملازم اور کام کے مالک کی چھان بین کرتا ہے ۔ اب نئے قانون کے مطابق کام کے مالک کی  نلا اوستا یا اجازت نامہ حاصل کرنے کے لیے چھان بین ختم کر دی گئی ہے ۔  ۔ اس کے صوبے کے کام کے دفتر کے دفتر کی اجازت حاصل کی جاتی ہے ۔ اس دفتر میں کام کے کنٹریکٹ کی قسم دیکھی جاتی اور یہ دیکھا جاتا ہے کہ اگر مالک نے کنٹریکٹ کے تمام لوازمات پورے کیے ہیں یا نہیں۔ اس کے علاوہ مالک کی سالانہ بچت کا حساب لگایا جاتا ہے ۔ اگر ان دفاتر میں سے کوئی ایک درخواست کو منظور نہ کرے ، تو اس صورت میں اجتماعی دفتر والے اس درخواست کو نا منظور کر دیتے ہیں ۔ اگر درخواست کو منظور کر لیا جائے تو اس صورت میں

۔ مالک کو اطلاع کی جاتی ہے کہ وہ نلا اوستا یا اجازت نامہ حاصل کرے اور کنٹریکٹ کے کاغذات پر دستخط کرے۔

۔ ٹیلی میٹک طریقے سے اٹالین کونصلیٹ کو اس نلا اوستا کے لیے مطلع کیا جاتا ہے ۔

یاد رہے کہ ملازمت کے اجازت نامہ  کی مدت اس کے جاری ہونے کے بعد  صرف 6 ماہ ہوتی ہے ۔ ان 6 مہینوں میں غیر ملکی ملازم کا فرض ہوتا ہے کہ وہ اپنے ملک کی اٹالین کونصلیٹ یا ایمبیسی میں جا کر کام کا ویزہ حاصل کر لے ۔

مالک کا فرض ہوتا ہے کہ وہ ملازم کو اجازت نامہ کی ایک کاپی روانہ کر دے۔ اجازت نامہ کی کاپی حاصل کرنے کے بعد ملازم اپنے ملک میں موجود اٹالین کونصلیٹ یا ایمبیسی میں جائے گا اور ایک اپوائنٹمنٹ یا ملاقات کا دن حاصل کرے گا ۔ ملازم کےملاقات کا دن وقف کرنے سے قبل ایمبیسی کو ٹیلی میٹک طریقے سے اجازت نامے کے بارے میں مطلع کر دیا جاتا ہے ۔ اس کے بعد ایمبیسی والے ملازم کو کنٹریکٹ کے متعلق بتاتے ہیں اور 30 دنوں کے اندر ویزہ جاری کر دیتے ہیں ۔ اس کے علاوہ ایمبیسی والے اٹالین وزارت داخلہ، کام کی وزارت اور سوشل ادارے انپس اور اینائل کو بھی ویزے کی اطلاع کر دیتے ہیں ۔ اس کے بعد غیر ملکی ملازم اٹلی میں آتا ہے اور پہلے 8 دنوں کے اندر اجتماعی دفتر میں جا کر کنٹریکٹ پر دستخط کرتا ہے اور اس کے علاوہ پر میسو دی سوجورنو حاصل کرنے کے لیے بھی درخواست دیتا ہے ۔ اگر غیر ملکی 8 دنوں کے اندر اجتماعی دفتر میں نہ جائے تو اسے اٹلی میں غیر قانونی شہری تصور کیا جائے گا ۔ وزیر داخلہ نے 20 فروری 2007 کو ایک قانون بنایا ہے ، جس کے مطابق غیر ملکی پہلی سوجورنو حاصل کرنے سے قبل ڈاک کی رسید کے ساتھ کام تبدیل کر سکتا ہے۔ وزارت کو اس بات کا علم ہے کہ پہلی پر میسو دی سوجورنو حاصل کرنے کے لیے ایک غیر ملکی کو سال تک کا انتظار کرنا پڑتا ہے اور اس دوران اگر اس کا کام ختم ہو جائے تو وہ دوبارہ کام کا کنٹریکٹ کر سکتا ہے ۔ اس صورت میں اسے دوبارہ سوجورنو کا کنٹریکٹ کرنا ہو گا اور اس کے بعد روزگار کے دفتر میں دوبارہ بتانا ہو گا ۔ سوشل ویلفئر کے وزیر نے استرانیری ان اطالیہ کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ غیر ملکی اپنی پہلی سوجورنو کا انتظار کرتے ہوئے کام بدل سکتا ہے ۔ یاد رہے کہ وزارت داخلہ نے ایک قانون کے مطابق یہ ثابت کر دیا ہے کہ سوجورنو کو جمع کروانے کے بعد حاصل ہونے والی ڈاک کی رسید سوجورنو کے برابر ہے ۔ یعنی اس سے نیا کام تلاش کیا جا سکتا ہے ، صحت کا کارڈ بنوایا جا سکتا ہے اور اپنے ملک واپس جایا جا سکتا ہے ۔

 

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com

اٹالین شہریت حاصل کرنے کا قانون

 

اٹالین شہریت حاصل کرنے کا نیا قانون بدل گیا ہے ۔ نئے قانون کا نام 15 luglio 2009 n. 94  ہے ۔ اس قانون میں چند معاملات میں اضافے کے علاوہ کچھ تبدیلیاں لائی گئی ہیں ۔ اس قانون  پر8 اگست 2009 سے عملدرآمد شروع ہو رہا ہے ۔ اس قانون سے قبل ایک غیر ملکی کسی اٹالین سے شادی کرنے کے 6 ماہ بعد اپنے ریذیڈنس یا کمونے میں رجسٹریشن کے ساتھ اٹالین شہریت حاصل کرنے کی درخواست دے سکتا تھا ۔ اس شادی کے دوران اگر ان دونوں میں طلاق ہو جاتی تھی تو اس صورت میں بھی غیر ملکی کی اٹالین شہریت کی درخواست کینسل نہیں کی جاتی تھی ۔ طلاق ہونے کی صورت میں بھی غیر ملکی شہریت حاصل کرنے والے دن تمام کوائف پورے کرتے ہوئے شہریت حاصل کر لیتا تھا ۔ یعنی شادی کے بعد شہریت حاصل کرنا ایک حق تصور کیا جاتا تھا ۔ اٹالین شہریت حاصل کرنے کے لیے ایک نیا ٹیکس لگایا گیا ہے ۔ اسکے علاوہ شادی کے بعد شہریت کی درخواست شادی کے 2 سال بعد دی جائے گی اگر آپ کسی دوسرے ملک میں آباد ہیں اور ایک اٹالین سے شادی کرتے ہیں تو اس صورت میں شادی کے 3 سال بعد اٹالین شہریت کی درخواست دی جائے گی ۔ موجودہ قانون کے مطابق شادی کے 6 ماہ بعد شہریت کی درخواست دی جاتی تھی۔ شہریت کی درخواست جمع کرواتے وقت 200 یورو کا ٹیکس جمع کروایا جائے گا ۔ پہلے قانون کے مطابق تمام کاغذات کا حلفیہ بیان دیا جا سکتا تھا لیکن اب تمام کاغذات یعنی فیملی کا سرٹفیکٹ، ریذیڈنس وغیرہ اصل ہونے ضروری ہیں اور یہ تمام درخواست کےساتھ نتھی کرنا لازمی ہیں ۔ تمام کاغذات کا اصل ہونا ان غیر ملکیوں کے لیے بھی ضروری قرار دے دیا گیا ہے جو کہ یورپین کمونٹی کے شہری ہیں ۔ 200 یورو جمع کروانے کا قانون بنا دیا گیا ہے لیکن ابھی تک یہ واضع نہیں کیا گیا کہ یہ رقم کہاں اور کیسے جمع کروائی جائے گی ، البتہ یہ کہا گیا ہے کہ کب درخواستیں اس ٹیکس کے بغیر جمع کروائی جا سکتی ہیں جب تک کہ نئے حکم جاری نہیں ہو جاتے ۔ وہ غیر ملکی جنہوں نے اٹالین شہریت حاصل کرنے کی درخواست دے رکھی ہے ۔ ان کے لیے بھی بری خبر ہے ۔ نیا قانون 2009/94 ان لوگوں پر بھی اثر کرے گا ۔ نئے قانون کے مطابق وہ غیر ملکی جنہوں نے اٹالین سے شادی کرنے کے بعد اٹالین شہریت حاصل کرنے کی درخواست دے رکھی ہے ۔ اگر انہوں نے یہ درخواست 2 سال قبل دی تھی تو یہ اٹالین شہریت پرانے قانون کے تحت حاصل کر سکتے ہیں لیکن اگر ان کی درخواست دو سال سے کم عرصے کے لیے جمع ہے تو اس صورت میں ان پر نیا قانون لاگو ہو گا ۔ یعنی انہیں ثابت کرنا ہو گا کہ یہ اس عرصے کے دوران اٹلی میں قانونی طور پر رہائش پذیر ہیں اور انکے پاس اپنے کمونے کا ریذیڈنس بھی ہے ۔ انہیں اپنی درخواست کے ساتھ تمام اصل کاغذات یعنی فیملی کا سرٹفیکٹ اور ریذیڈنس کا سرٹیفکٹ نتھی کرنا ہو گا ۔ لوازمات نہ پورے کرنے کی صورت میں ان کی درخواست کینسل کر دی جائے گی ۔ یاد رہے کہ نئے قانون کے مطابق اب اٹلی میں موجود غیر ملکی اگر کسی اٹالین شہری سے شادی کرنا چاہتا ہے تو اس کے لیے اسے اٹلی میں ریگولر ہونا لازمی ہے ۔ اس کے علاوہ اسے یہ بھی ثابت کرنا ہو گا کہ یہ اپنی بیوی یا خاوند کے ساتھ ایک ہی جگہ پر رہ رہا ہے اور انکی شادی صرف کاغذی نہیں ۔ یہ قانون ان غیر ملکیوں کے لیے ضروری قرار دے دیا گیا ہے ، جنہوں نے دو سال کے کم عرصے سے شہریت کی درخواست دے رکھی ہے ۔ نئے قانون کے مطابق شہریت کی درخواست کے ساتھ یہ دو فارم نتھی کرنا لازمی قرار دے دیے گئے ہیں ۔

 

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com

ٹورسٹ گائیڈ

اگر آپ گرمیوں کی چھٹیوں میں سیر کرنے کا پروگرام بنا رہے ہیں تو آپ فکر نہ کریں کیونکہ سفر کرنے کے اصولوں کی گائیڈ آپکی مددگار ثابت ہو سکتی ہے ۔ استرانیری ان اطالیہ کے ایکسپرٹ کو ایک سیاح یا ٹورسٹ نے بتایا کہ گزشتہ سال اس کے دوست نے ایک ٹورسٹ ایجنسی سے ایک پیکٹ خریدا ۔ جب میرا دوست سفر پر گیا تو اس کا سفر اس پیکٹ کے مطابق نہیں تھا ۔ ایجنٹ نے جو بتایا تھا ، اصل میں ایسا ہر گز نہیں تھا ۔ اب میں گرمیوں میں کہیں سفر کرنے کے لیے جانا چاہتا ہوں اور مجھے اہم معلومات کی ضرورت ہے ۔ میں نہیں چاہتا کہ مجھے میرے دوست کی طرح مسائل کا سامنا کرنا پڑے ۔ میں ایسے گروپ کے ساتھ سفر کرنے کا خواہشمند ہوں جو کہ بہترین طور پر آرگنائز کیا گیا ہو ۔  یاد رہے کہ ٹورزم یا سیاحت کا ایک قانون ہوتا ہے ۔ اٹلی کے سیاحت کے قانون کو حال ہی میں حکومت نے تبدیل کرتے ہوئے ایک نیا قانون بنایا ہے جسے (Decreto Legislativo del 23 maggio 2011, n. 79)  کہتے ہیں ۔ یہ قانون 21 جون سے عمل پیرا ہو گا اور اس کے مطابق بہت زیادہ تبدیلیاں رونما ہوئی ہیں ۔ اس کے مطابق pacchetti turisticiیا گروپ ٹورزم کے لیے پائیدار قوانین بنائے گئے ہیں ۔ گروپ ٹورزم میں ایک ایجنسی یا ٹریول ایجنٹ اپنے گاہکوں کو ڈسکاؤنٹ کے ساتھ ایک قیمت پیش کرتا ہے ، جس میں سفر، رہائش اور اس کے علاوہ دوسری آزائشیں موجود ہوتی ہیں ، مثال کے طور پر ٹورزم کی جگہ پر پہنچ کر وہاں کا گاڑی کا خرچہ اور اس جگہ پر سفر کے اخراجات وغیرہ ۔  عام طور پر باقی مانندہ اخراجات کا بل علیحدہ بنایا جاتا ہے ۔ کنٹریکٹ عام طور پر ایجنسی ٹیلی میٹک طریقے سے کرتی ہے لیکن اس پر دستخط کرنا لازمی ہوتے ہیں اور یہ ایجنسی کسی بھی جگہ پر ہو سکتی ہے ، یعنی سڑک پر یا پھر کسی دفتری علاقے میں ۔ کنٹریکٹ کی ایک کاپی آپ کے پاس ہونی لازمی ہے ، جس پر آپ نے دستخط کر رکھے ہیں ۔ ایجنسی کا فرض ہوتا ہے کہ وہ آپ کو ایک گائیڈ مہیا کرے جس پر سفر کے تمام تر اصول، اخراجات، معلومات، سروس اور ٹرانسپورٹ کے بارے میں تمام تر درج ہو ۔ اگر مسافر کے ساتھ ایجنسی والے یا اس کا سفر کا ایجنٹ کوئی ایسا سلوک کرتا ہے جو کہ کنٹریکٹ میں شامل نہیں ہے ، یا پھر سفر کے دوران کوئی دوسرے سفر کے لیے کہتا ہے یا پھر وہ سہولتیں مہیا نہیں کرتا جو کہ اس نے کنٹریکٹ میں لکھ رکھی ہیں تو مسافر واپس اپنے وطن آسکتا ہے اور اس کام کے لیے اسے ایک انشورنس کروانی ہوتی ہے جو کہ اس قسم کے حادثات کے لیے کروائی جاتی ہے ۔ اپنی گارنٹی اور وعدوں کو پورا نہ کرنے کی صورت میں مسافر اپنی انشورنس کو استعمال کر سکتا ہے اور اس خرچے سے اپنے وطن واپس آسکتا ہے ۔ مسافر کا حق بنتا ہے کہ وہ کنٹریکٹ میں ان تمام انشورنسوں کے بارے میں پڑہ لے جو کہ اس میں شامل ہیں ۔  آپ جب ایک ایسے سفر کے پیکٹ کے زریعے سفر کریں ، جس میں ہر آزائش شامل تھی مگر جب آپ اس ملک یا جگہ پر پہنچیں جہاں سفر کا آغاز ہونا تھا اور وہاں پہنچ کر آپ کو پتا چلے کہ ایجنٹ نے جو بتایا تھا وہ تو بالکل مختلف تھا تو اس صورت میں آپ کی چھٹیاں خراب ہو جائیں گی ، جن کا انتظار آپ سارے سال سے کر رہے تھے ۔ اس صورت میں ٹورسٹ یا مسافر کو بڑی پریشانی کا سامنا کرنا پڑتا ہے ، بعض اوقات اس کا وقت ضائع ہوتا ہے اور بعض اوقات اسے بڑے مسائل کا سامنا کرنا ہوتا ہے ۔ بعض اوقات ایجنسی والے آپ کو ہوائی جہاز کے بارے میں معلومات دے دیتے ہیں اور جب آپ ائر پورٹ پہنچیں تو اس کا وقت کوئی اور ہوتا ہے اور اپنا جہاز کھو بیٹھتے ہیں ۔ یہ سب سے پہلا نقصان ہوتا ہے ۔ جب آپ کسی دوسرے جہاز سے ٹورزم کی جگہ پر پہنچیں تو وہاں ہوٹل نہیں ہوتا یا پھر آپ کو کسی دوسرے ہوٹل میں ٹھہرانے کی کوشش کی جاتی ہے ، جو کہ آپ نے اپنے کنٹریکٹ یا ایجنسی کی گائیڈ میں نہیں دیکھا تھا ۔ یہ دوسرا نقصان سہنا پڑتا ہے ۔ اس کے بعد وہ تمام آزائشیں شامل نہیں ہیں جو کہ آپ کو بتائی گئی تھیں ۔ یعنی شہر یا کسی دوسری جگہ کا ایک یا ایک سے زیادہ سفر، مفت گاڑی یا ٹرین یا بس کا مفت سفر ۔ ان تمام آزئشوں کی کمی کیوجہ سے مسافر کو سخت پریشانی کا سامنا کرنا پڑتا ہے ۔ ان تمام صورتوں میں مسافر کو خود اپنا بندوبست کرنا پڑتا ہے اور اس کا وقت اور مال ضائع ہوتا ہے اور جو اس نے خوبصورت سفر کا خواب دیکھا ہوتا ہے ، وہ جہنم بن جاتا ہے ۔ یاد رہے کہ اس صورت میں تمام تر ذمہداری اس ایجنسی کی ہوتی ہے ، جس نے یہ سفر تیار کیا تھا اور جہاں سے مسافر نے یہ سفر خریدا تھا ۔ کنٹریکٹ کے مطابق وہ اس ایجنسی سے ان تمام نقصانات کے اخراجات حاصل کرنے کے لیے کہہ سکتا ہے ۔  یاد رہے کہ نقصانات دو قسم کے ہوتے ہیں ایک وہ جسے danno patrimonialeکہتے ہیں ، جس میں ٹورسٹ اپنا خرچہ استعمال کرتے ہوئے مسائل ختم کرتا ہے ۔ مثال کے طور پر کوئی دوسرا ہوٹل لیتا ہے ۔ کسی ٹیکسی یا گاڑی کو کرایہ پر لیتا ہے یا پھر اپنے لیے دوائیاں یا ڈاکٹر ڈھونڈتا ہے ۔ اس کے بعد نفسیاتی نقصان ہوتا ہے جسے danno non patrimonialeکہتے ہیں اور اس میں وہ سارا نقصان شامل ہوتا ہے جو کہ آپ کو نفسیاتی طور پر برداشت کرنا پڑتا ہے ۔ مثال کے طور پر جہاز کھو دینے کی صورت میں کوئی دوسرا جہاز پکڑنا اور خواہ مخواہ انتظار کرنا، ٹورزم کی جگہ پر پہنچ کر ایسے ہوٹل میں جانا جو آپ کو پسند نہیں یا پھر ان مسائل کو ختم کرنے کے لیے ایک یا دو دن کا سفر کھو دینا اور اسکے بعد خوش ہونے کی بجائے اداس ہو جانا اور غصے کا اظہار کرنا ۔ یاد رہے کہ جب آپ ایجنسی سے کنریکٹ کرتے ہیں تو بعض اوقات وہ اپنے آپ کو محفوظ کرنے کے لیے ایسی شکیں ڈال دیتے ہیں ، جس سے انکی ذمہداری کم ہو جائے اس لیے ضروری ہے کہ کنٹریکٹ کرنے سے قبل اسے اچھی طرح پڑہ لیا جائے ۔  ان نقصانات کے علاوہ ایک اور نقصان قابل زکر ہے ، جسے danno da vacanza rovinataیا سیاحت کا خراب ہونا کہتے ہیں جو کہ ٹورزم کے قانون میں شامل ہے ۔ ٹورزم کے قانون codice del turismoمیں ان تمام نقصانات کے بارے میں لکھا گیا ہے جو کہ ایک ٹورسٹ کو پیش آسکتے ہیں ۔ ٹورسٹ ایجنسی یا ایجنٹ یا ٹورزم کی جگہ پر پہنچ کر جو ایجنٹ ملتا ہے ، یہ سب ان نقصانات کو پورا کرنے کے ذمہدرا ہوتے ہیں ۔ جب ایک ایجنسی یا ایجنٹ ان لوازمات کو پورا نہ کرے جو کہ کنٹریکٹ میں شامل تھے ، تو اس صورت میں ٹورزم کا قانون بھی لاگو کیا جا سکتا ہے ۔ سیاحت کا خراب ہونے کا نقصان یورپین یونین کے ٹورزم کے قانون میں بھی شامل ہے ۔ یورپین یونین کے قانون کے مطابق اگر کسی سیاح کی سیر آرگنائزڈ پیکٹ خریدنے کیوجہ سے خراب ہو جائے تو اس کا حق ہے کہ وہ اپنے سفر کے پیسے واپس لے اور اس کے علاوہ اپنا نفسیاتی نقصان بھی ادا کرنے کے لیے کہے جو کہ اس نے سفر کے دوران برداشت کیا ہے ۔ آپ کے لیے ضروری ہے کہ آپ ان تمام رسیدوں ، ثبوتوں اور گواہیوں کو اپنے ساتھ رکھیں ۔ خاص طور پر اس ہوٹل کے کمرے کی تصویریں بنا لیں جس ہوٹل میں آپ کو رہنا پڑا ۔ اگر اس ہوٹل کی حالت بری ہے تو اس ہوٹل کی تصویریں بھی بنا لیں ۔ اس کے علاوہ اس ایجنٹ کے بارے میں بھی تمام معلومات اکٹھی کر لیں ، جس نے آپ سے برا سلوک کیا ہو یا سنہری خواب دکھا کر کسی مسئلے میں ڈال دیا ہو یا پھر آپ کو اپنی مرضی کے لیے مجبور کیا ہو ۔ اس کے علاوہ اگر ہوٹل کے سٹاف نے برا سلوک کیا ہو تو ان معلومات کو بھی اکٹھا کر لیں ۔  ہر وہ کمی جو کہ ٹورزم کے دوران ٹورسٹ کو پیش آتی ہے ، اس کا حق ہے کہ وہ اس کے بارے میں تمام معلومات مہیا کرے بشرطیکہ ان کا زکر کنٹریکٹ میں کیا گیا ہو ۔ اس کے بعد لوکل ایجنٹ یا ایجنسی کا حق ہوتا ہے کہ ان کمیوں کو پورا کرنے کے لیے فوری طور پر کچھ کریں ۔ ٹورسٹ اس کے علاوہ ان تمام ایجنسیوں یا ایجنٹوں کو بھی اپنے نقصانات کے بارے میں بتا سکتا ہے جو کہ براہ راست اصل ایجنسی سے منسلک ہیں ۔ اس کا حق ہوتا ہے کہ یہ ٹورزم سے واپس آکر 10 دنوں کے اندر ایک ڈاک کی رجسٹری کے زریعے ان ایجنٹوں کو باخبر کردے جو کہ اس کے نقصان کو پورا کرنے کے ذمہدرا ہیں ۔ اگر ایجنسی والے آپ کا نقصان پورا کرنے کے خواہشمند نہیں ہیں تو اس صورت میں آپ کو کسی وکیل سے رابطہ کرنا ہوگا ۔ وکیل ایجنسی سے مل جل کر مسئلہ حل کرنے کی کوشش کرے گا اور اگر اس صورت میں مسئلہ حل نہ ہو تو عدالت کا رجوع کیا جائے گا ۔ وکیل کے علاوہ اٹلی میں ایسی ایسوسی ایشنیں ہیں جو کہ گاہکوں کی مدد کرتی ہیں آپ ان ایسوسی ایشنوں سے بھی رابطہ کر سکتے ہیں ۔ انہیں associazione per i diritti dei consumatoriکہتے ہیں ۔ آپ سیاح نے عدالت میں کیس کرنا ہے تو وہ اس شہر کی عدالت میں کیس کرے گا ، جہاں وہ رہائش پذیر ہے ۔ عدالت ایک سے تین سال کے دوران آپ کا نقصان پورا کرنے کے لیے وقت لے سکتی ہے ۔ اس لیے ضروری ہے کہ سیاح فوری طور پر عدالت میں کیس کروا دے تا کہ نقصان پورا کرنے کے لیے آپ کو ایک پہلی رسید یا نوٹس مل جائے ۔ اگر اس دوران ایجنسی بند ہو جائے تو سیاح گورنمنٹ کی ایجنسی fondo nazionale di garanziaسے رابطہ کر سکتا ہے ۔ یہ انسٹی ٹیوٹ نقصان پورا کرنے کے لیے بنایا گیا ہے ۔ یہ انسٹی ٹیوٹ اس صورت میں عمل میں آتا ہے ، جب کوئی ٹورزم کی ایجنسی بند ہو جائے یا ان کا دیوالیہ ہو جائے ۔ یہ ایجنسی صرف سفر کے اخراجات پورا کرنے کے لیے مدد کرتی ہے ، جب ٹورسٹ ملک واپس آجائے اور اس کے ساتھ سفر کا فراڈ ہوا ہو ۔ اس صورت میں سیاح کو تمام تر ثبوت پیش کرنا ہوتے ہیں ۔

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com

ملازمت کے دوران چھٹیوں کے حقوق کی گائیڈ

 

اٹالین آئین کے مطابق تمام ملازمین کو چھٹیوں کا حق دیا گیا ہے ۔ چھٹیوں کے دوران ملازمین یا مزدوروں کا حق ہے کہ وہ پورا سال کام کرنے کے بعد آرام کر سکیں اور ان قوتوں کو دوبارہ حاصل کر سکیں جو کہ انہوں نے پورا سال کام کرتے ہوئے صرف کی ہوتی ہیں ۔ چھٹیوں کے دوران ملازمین اپنی جسمانی اور زہنی طاقت کو دوبارہ واپس لا سکتے ہیں ۔ چھٹیوں کا حق ایک بنیادی حق ہے ، جس پر مالک سے سودے بازی نہیں کی جا سکتی ۔ مالک یا ملازم اپنی مرضی سے چھٹیوں کے حق میں رد و بدل کرنے کی کوشش کریں تو اسکی کوئی قانونی حیثیت نہیں ہو گی بشرطیکہ ملازم کی فرم کو بڑی سخت ضرورت ہو ۔ چھٹیوں کا عرصہ کام کا مالک اپنے ادارے کی ضرورت اور ملازم کی ضروریات کو مدنظر رکھتے ہوئے کرتا ہے ۔ مالک کا حق ہے کہ وہ ملازم کو چھٹیوں کے عرصے کے بارے میں پہلے سے اطلاع کرے ۔ چھٹیوں کے قانون میں چند سالوں سے تبدیلیاں کی گئی ہیں ۔ چھٹیوں کا نیا قانون  سے لاگو کیا گیا ہے ۔ اس قانون کے مطابق ایک ملازم کا حق ہے کہ وہ پورا سال کام کرنے کے بعد  ہفتوں کی چھٹیاں حاصل کرے ۔ پورا سال کام کرنے کے بعد ملازم کا حق ہوتا ہے کہ وہ اسی سال میں کم از کم  ہفتوں کی چھٹیاں پوری کرے ۔ اس عرصے کے دوران  ملازم کا بھی حق ہے کہ وہ ان چھٹیوں کا مطالبہ کر سکے ۔ چار ہفتوں کی چھٹیاں 18 مہینوں کے دوران صرف کی جاتی ہیں ۔ اگر مالک اس عرصے کے دوران ملازمین کو چھٹیاں میسر نہ کرے تو اس صورت میں اسے ہر ملازم پر 130 یورو سے لیکر 780 یورو تک کا چالان ہو سکتا ہے ۔ ان چار ہفتوں کی چھٹیوں کی رقم میں ادائیگی کرنا غیر قانونی ہے ۔ اگر ملازم استعفی دیتا ہے تو اس صورت میں چھٹیوں کی رقم حاصل کی جا سکتی ہے ۔ قومی کنٹریکٹوں میں چھٹیوں کی تعداد اور ان کا عرصہ بعض اوقات مختلف ہوتا ہے ۔ چار ہفتوں سے زیادہ کی چھٹیاں 18 مہینوں کے عرصے کے بعد بھی کی جا سکتی ہیں یا پھر ان کے عوض چھٹیوں کی بجائے رقم بھی حاصل کی جا سکتی ہے ۔ چھٹیوں کی تعداد کام کرنے کے بعد بڑھتی ہے ۔ ہر مہینے ایک ملازم دو دنوں کی چھٹیاں اور دو گھنٹے کی اجازت جمع کرتا ہے ۔ چھٹیاں اس صورت میں بھی جمع ہوتی ہیں ، جب ملازم مخصوص صورت کے تحت کام پر نہ جائے ۔ حاملہ ہونے کی صورت میں ، بیمار ہونے کی صورت میں اور کام پر چوٹ لگنے کی صورت میں چھٹیاں جمع ہوتی رہتی ہیں ۔ الیکشن کے دنوں میں پولنگ اسٹیشن پر کام کرنے کی صورت میں یا پھر کام پر کام کم ہونے کی صورت میں چھٹیاں جمع ہوتی رہتی ہیں ۔ اگر آپ نے بچے کی دیکھ بال کے لیے چھٹیاں لی ہیں ، بچے کی بیماری کے لیے چھٹیاں لی ہیں یا پھر آپ نے کوئی سرکاری عہدہ سنبھالا ہے تو اس صورت میں چھٹیاں جمع نہیں ہوتیں ۔ اگر آپ نے استعفی دے دیا ہے تو اس دوران چھٹیاں جمع نہیں ہوتیں ۔ اگر آپ چھٹیوں کے دوران بیمار ہو گئے ہیں تو اس دوران چھٹیاں رک جاتی ہیں اور بیماری کا عرصہ شروع ہو جاتا ہے ، اگر آپ چھٹیوں کے دوران بیمار ہو جائیں تو فوری طور پر مالک کو سرٹیفیکٹ روانہ کرنا لازمی ہوتا ہے ۔ جب مالک کو بیماری کا سرٹیفیکٹ مل جائے گا تو اسی دن چھٹیوں کو روک دیا جائے گا ۔ یاد رہے کہ چھٹیوں کا قانون ملازم کی اچھی صحت کے لیے وجود میں آیا ہے اور اگر وہ بیمار ہو جائے تو اسکی چھٹیاں ضائع کرنا قانون کی خلاف ورزی ہے ۔ چھٹیوں کے دوران اگر قومی چھٹیاں یا مذہبی چھٹیاں آ جائیں تو ملازم کا حق ہوتا ہے کہ وہ چھٹیوں کی تعداد قومی چھٹیوں کو شمار کرتے ہوئے بڑھا لے یا پھر اس کا معاوضہ حاصل کر لے ۔ معاوضے کا تعلق ملازم کے قومی کنٹریکٹ کو مد نظر رکھ کر کیا جاتا ہے ۔ چھٹیوں کے دوران ملازم کی تنخواہ اتنی ہی ہوتی ہے ، جتنی وہ کام کرنے کے دوران حاصل کرتا ہے ۔ اگر ملازم ایک چھوٹے عرصے کے بعد کام کرنے کے بعد استعفی دے دیتا ہے تو اس صورت میں مالک کا حق ہوتا ہے کہ وہ ملازم کو اسکے دن یا گھنٹے ادا کرنے کے بعد اسکی چھٹیوں کی رقم بھی ادا کرے ۔

گھر میں کام کرنے والوں کی چھٹیاں

گھر میں کام کرنے والے یا ڈومیسٹک ملازمین کا حق ہے کہ وہ پورا سال کام کرنے کے بعد مسلسل عرصے کے لیے آرام کر سکیں اور ان قوتوں کو دوبارہ حاصل کر سکیں جو کہ انہوں نے پورا سال کام کرنے کے بعد خرچ کی ہوتی ہیں ۔ اس صورت میں چھٹیوں کاوقت مالک کی طرف سے تہہ کیا جاتا ہے اور اس میں ملازم کی ضروریات کو مدنظر رکھا جاتا ہے ۔ ان چھٹیوں کو سال کے دوران خرچ کرنا لازمی ہوتا ہے ، چونکہ ڈومیسٹک کام میں زیادہ تر غیر ملکی ہوتے ہیں ، اس لیے ان چھٹیوں کو 2 سال کے عرصے کے لیے بھی جمع کیا جا سکتا ہے ۔ یہ قانون اس لیے بنایا گیا ہے تا کہ غیر ملکی اپنے ملک واپس جا سکیں اور اپنے خاندان کو وقت دے سکیں ۔ وہ ملازمین جو کہ گھنٹوں کے حساب سے کام کرتے ہیں ان کے لیے سال میں کم سے کم چھٹیوں کا عرصہ 8 دنوں کا ہے ۔ وہ ملازم جو کہ 5 سال سے کام کر رہے ہیں انکے لیے 15 دنوں کی چھٹیاں ہیں ۔ وہ ملازمین جو کہ 5 سال سے زیادہ عرصے سے ایک ہی جگہ پر کام کر رہے ہیں ، ان کی چھٹیاں 20 دنوں کی ہیں ۔ وہ ملازمین جو کہ ایک گھر میں رہتے بھی اور کام بھی کرتے ہیں انکی چھٹیاں 26 دنوں پر مختص ہیں ۔ اگر ملازم پورا سال کام نہیں کرتا تو اس صورت میں اسکے مہینوں کے کام کو مد نظر رکھ کر چھٹیاں تہہ کی جاتی ہیں ۔

اٹلی میں کیتھولک مذہب کے علاوہ دوسرے مذاہب کے لیے چھٹیوں کا قانون

اٹلی کے آئین کے مطابق اٹلی میں موجود تمام مذاہب کو آزادی دی گئی ہے اور انہیں کھلے عام عبادت کرنے کے لیے روکا نہیں گیا ۔ آزادی مذہب کے قانون میں یہ بھی شامل ہے کہ مذاہب کو ان کے تہوار کے لیے چھٹی دی جائے ۔ کیتھولک مذہب کے علاوہ جن مذاہب نے اٹلی کی حکومت کے ساتھ باہمی مذہبی معاہدہ کیا ہے ، انہیں حق ہے کہ یہ اپنے مذہبی تہواروں کے دوران کام نہ کریں ۔ اٹلی میں یہودیوں کو ہفتے کے روز کام نہ کرنے کی اجازت دی گئی ہے کیونکہ یہودیوں نے اٹلی کے ساتھ معاہدہ کر رکھا ہے ۔ آج کل اسلام کے ساتھ بھی معاہدے کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے اور اس سلسلے میں اسلامی کونسل کے ساتھ پارلیمنٹ کی میٹنگیں تہہ پائی گئی ہیں ۔ یاد رہے کہ اگر ملازم اپنی مرضی سے چھٹیاں کرتا ہے یا پھر چھٹیوں کے عرصے کو اپنی مرضی سے بڑھا لیتا ہے تو اس صورت میں مالک اسے کام سے نکال سکتا ہے ۔ اتوار کے علاوہ قومی چھٹیاں اور مذہبی چھٹیاں ملازم کی چھٹیوں میں شامل نہیں ہوتیں ۔ قومی چھٹیوں اور مذہبی چھٹیوں کے لیے کام کے کنٹریکٹ کو مدنظر رکھا جاتا ہے ۔ اگر یہ ملازم کی چھٹیوں کے دوران آ جائیں یا پھر ان قومی اور مذہبی چھٹیوں کے دوران ملازم کام کرے تو اسے ڈبل تنخواہ دینا یا کنٹریکٹ کے مطابق تنخواہ دینا مالک کا حق ہوتا ہے ۔ قومی چھٹیوں میں 25 اپریل یعنی آزادی کا دن، یکم مئی یعنی مزدوروں کا دن اور 2 جون یعنی ریبلک کے بننے کا دن شامل ہیں ۔ ہفتے کے دوران چھٹیاں یوں ہیں ۔ سال کا پہلا دن ، چھ  جنوری یا ایپی فانیا، پاسکے کے بعد آنے والی سوموار جو کہ اسلامی مہینوں کی طرح ہر سال مختلف ہوتی ہے ، حضرت مریم کا دن پندرہ  اگست، تمام حضرتوں کا دن یکم نومبر ، آٹھ  دسمبر ، پچیس اور چھبیس  دسمبر جو کہ حضرت عیسی کی پیدائش اور خوشی کے دن ۔ یہ تمام دن قومی کنٹریکٹ میں چھٹیوں میں شمار ہوتے ہیں

Joomla Templates and Joomla Extensions by ZooTemplate.Com